UA-166045260-1 जब कुछ खो जाए तो यह दुआ पढ़े - Islamic Way Of Life

Latest

A website for Islamic studies, Islamic History , Islamic teachings , Islamic way of Life , Islamic quotes, Islamic research , Islamic books , Islamic method of prayers, Islamic explanation of Quran, Islamic Hadith, Islamic Fatwa and truth of Islam.

Sunday, 3 July 2022

जब कुछ खो जाए तो यह दुआ पढ़े

 जब कुछ खो जाए तो यह दुआ पढ़ें

कुछ गुम हो जाने पर पढ़े जाने वाली दुआ

"या हफीजु" ( ऐ निगरानी रखने वाले) 119 बार पढ़कर इस आयत को 119 बार पढ़ें।

يَا بُنَيَّ إِنَّهَا إِن تَكُ مِثْقَالَ حَبَّةٍ مِّنْ خَرْدَلٍ فَتَكُن فِي صَخْرَةٍ أَوْ فِي السَّمَاوَاتِ أَوْ فِي الْأَرْضِ يَأْتِ بِهَا اللَّهُ-

"या बुनय्य इन्नहा इन तकु मिस्काल हब्बतिम्मिन खर`दलीन फतकुन फी सखरतीन अव फिस्सामावते औ फिलअर्जी यअति बिहल्लाहू"


इसमें सन्देह नहीं कि यदि वह राई के दाने के बराबर भी हो, फिर वह किसी चट्टान के बीच हो या आकाशों में हो या धरती में हो, अल्लाह उसे ला उपस्थित करेगा।
(Quran: Surah Name: لقمان Verse: 16)
Dua in hindi

After reading "Ya Hafizu(O watchers!)" 119 times, recite this Dua 119 times 


"Ya bunayya innaha in taku mithqala habbatin min khardalin fatakun fee sakhratin aw fee alssamawati aw fee alardi yati biha Allahu"


 If it be (anything) equal to the weight of a grain of mustard seed, and though it be in a rock, or in the heavens or in the earth, Allâh will bring it forth
Dua in Roman English
 



اس آیت کو 119 مرتبہ یَا حَفِظُوْا (اے نگہبان) 119 مرتبہ پڑھ کر پڑھیں۔


يٰبُنَيَّ اِنَّهَاۤ اِنْ تَكُ مِثْقَا لَ حَبَّةٍ مِّنْ خَرْدَلٍ فَتَكُنْ فِيْ صَخْرَةٍ اَوْ فِى السَّمٰوٰتِ اَوْ فِى الْاَ رْضِ يَأْتِ بِهَا اللّٰهُ ۗ -

"کوئی چیز رائی کے دانہ برابر بھی ہو اور کسی چٹان میں یا آسمانوں یا زمین میں کہیں چھپی ہوئی ہو، اللہ اُسے نکال لائے گا وہ باریک بیں اور باخبر ہے"
(QS. Luqman 31: Verse 16)

Surat No. 31 Ayat NO. 16 Tafseer ¹
10: یہ اللہ تعالیٰ کے علم محیط کا بیان ہے جو لوگ آخرت کا انکار کرتے تھے، وہ یہ کہا کرتے تھے کہ جب انسان کے مرنے کے بعد اس کے سارے اجزاء منتشر ہوجائیں گے تو انہیں کیسے جمع کیا جاسکے گا ؟ حضرت لقمان نے بیٹے کو بتایا کہ کوئی چھوٹے سے چھوٹا ذرہ بھی زمین و آسمان کی کسی بھی پوشیدہ جگہ چلا جائے، وہ اللہ تعالیٰ کے علم میں اور وہ اسے نکال لانے پر پوری طرح قادر ہے۔ یاد رہے کہ جب جس کسی شخص کی کوئی چیز گم ہوجائے تو اسے تلاش کرنے کے لئے بعض بزرگوں نے بتایا ہے کہ گیارہ مرتبہ ’’ اِنَّا لِلّٰہِ وَاِنَّا اِلَیْہِ رَاجِعُوْنَ‘‘ پڑھ کر سورۂ لقمان کی یہ آیت تلاوت کی جاتی رہے تو عموماً وہ گمشدہ چیز مل جاتی ہے۔ بندہ نے بھی اس کا درجنوں بار تجربہ کیا ہے۔

Surat No. 31 Ayat NO. 16 Tafseer ²
 سورة لُقْمٰن حاشیہ نمبر :27
لقمان کے دوسرے نصائح کا ذکر یہاں یہ بتانے کے لیے کیا جا رہا ہے کہ عقائد کی طرح اخلاق کے متعلق بھی جو تعلیمات نبی صلی اللہ علیہ وسلم پیش کر رہے ہیں وہ بھی عرب میں کوئی انوکھی باتیں نہیں ہیں  ۔  
 
 سورة لُقْمٰن حاشیہ نمبر :28
یعنی اللہ کے علم سے اور اس کی گرفت سے کوئی چیز بچ نہیں سکتی  ۔  چٹان کے اندر ایک دانہ تمہارے لیے مخفی ہو سکتا ہے  ،  مگر اس کے لیے عیاں ہے  ۔  آسمانوں میں کوئی ذرہ تم سے بعید ترین ہو سکتا ہے  ،  مگر اللہ کے لیے وہ بہت قریب ہے  ۔  زمین کی تہوں میں پڑی ہوئی کوئی چیز تمہارے لیے سخت تاریکی میں ہے مگر اس کے لیے بالکل روشنی میں ہے  ۔  لہٰذا تم کہیں کسی حال میں بھی نیکی یا بدی کا کوئی کام ایسا نہیں کر سکتے جو اللہ سے مخفی رہ جائے  ۔  وہ نہ صرف یہ کہ اس سے واقف ہے  ،  بلکہ جب محاسبہ کا وقت آئے گا تو وہ تمہاری ایک ایک حرکت کا ریکارڈ سامنے لا کر رکھ دے گا ۔  

No comments:

Post a Comment

Please do not enter any spam link in comment box.